Friday, 26 June 2015

Bridges

کبھی کبھی پل جلانے پڑتے ہیں تا کہ دوبارہ کبھی پار نہ کیا جا سکے 

Omnibus

Post a Comment